صفحہ اول / انٹرنیشنل / فرانسیسی آرٹسٹ نے خود کو ایک ہفتے کے لیے مجسمے میں قید کرلیا

فرانسیسی آرٹسٹ نے خود کو ایک ہفتے کے لیے مجسمے میں قید کرلیا

پیرس: فرانس کے ایک مصور ابراہام نے خود کو اپنے ہی بنائے ہوئے لکڑی کے مجسمے میں ایک ہفتے کے لیے قید کرلیا۔
آن لا ئن نیوز کے مطابق 46 سالہ فرنچ مصور ابراہام پوئنچیول نے گھنے جنگل میں رکھے گئے ایک طویل القامت شیر کے مجسمے میں خود کو قید کرلیا ہے۔ وہ اپنے ہی تخلیق کیے گئے لکڑی کے مجسمے میں 8 جون تک بند رہیں گے جہاں غذائی ضرورت پوری کرنے کے لیے انہوں نے خشک گوشت، میوہ جات اور چند پھل بھی اپنے ہمراہ رکھے ہیں۔
یہ پہلی مرتبہ نہیں جب فرانسیسی آرٹسٹ کوئی ایڈونچر انجام دینے جا رہے ہیں بلکہ وہ اس سے قبل بھی ایسے ہی دلچسپ اور حیرت انگیز ایڈونچرز کرتے آئے ہیں جو اب ان کی وجہ شہرت بن چکے ہیں۔ فرنچ آرٹسٹ کبھی ایک ٹن وزنی پتھر کے اندر خود کو تین ہفتوں کے لیے بند کر لیتے ہیں تو کبھی بھالو کی شکل کے مجسمے کے اندر 13 دن تک بھنوروں اور کیڑے مکوڑوں پر گزارا کرتے ہیں۔ اسی طرح ایک شیشے کے گھر میں تین ہفتوں تک انڈوں پر بھی بیٹھے رہے۔
اپنے ان ایڈونچرز کے ذریعے وہ دنیا کو یہ پیغام دینا چاہتے ہیں کہ ہمارے اردگرد کے ماحول میں موجود حیات کس طرح زندگی بسر کرتے ہیں اور ان کی ضروریات کیا ہیں اور بہ حیثیت اشرف المخلوقات ہم دیگر مخلوقات کی کس طرح مدد کرسکتے ہیں۔

Check Also

ربادا نے کرکٹ جنوبی افریقہ کا سالانہ ایوارڈز میلہ لوٹ لیا

جوہانسبرگ(این این آئی)مایہ ناز جنوبی افریقی فاسٹ باؤلر کگیسو ربادا نے کرکٹ جنوبی افریقہ کا …

جواب دیں